اردو کے پہلے لائیو ویب ٹی وی ،،ادبستان،،کے فیس بک پیج کو لائیک کر کے ادب کے فروغ میں ہماری مدد کریں۔ادبستان گذشتہ پانچ سال سے نشریات جاری رکھے ہوئے ہے۔https://www.facebook.com/adbistan


ADBISTAN TV


منگل، 13 مئی، 2014

ارشد شاہین کی غزل

ارشد شاھین
سوئے افلاک اٹھا کر جو پلک دیکھتے ہیں
کتنی حیرت سے ہمیں حور و مَلَک دیکھتے ہیں
وسعتِ چشم عطا کی ہے وہ مالک نے ہمیں
ہم بہت دور ، بہت دور تلک دیکھتے ہیں
حسن ہے حسن تو پھر ایک نظارہ کافی
دیکھنے والے فقط ایک جھلک دیکھتے ہیں
صحبتِ عہدِ گزشتہ ہمیں یاد آتی ہے
چاند تاروں سے مزیّن جو فلک دیکھتے ہیں
رنگ کیا ہے پسِ مژگاں ، ہمیں معلوم تو ہو
اپنی آنکھوں سےکسی روز چھلک دیکھتے ہیں

1 تبصرہ: