ادبستان اور تخلیقات کے مدیرِاعلیٰ رضاالحق صدیقی کا سفرنامہ، دیکھا تیرا امریکہ،،بک کارنر،شو روم،بالمقابل اقبال لائبریری،بک سٹریٹ جہلم پاکستان سے شائع ہو گیا ہے،جسے bookcornershow room@gmail.comپر میل کر کے حاصل کیا جا سکتا ہے
اردو کے پہلے لائیو ویب ٹی وی ،،ادبستان،،کے فیس بک پیج کو لائیک کر کے ادب کے فروغ میں ہماری مدد کریں۔ادبستان گذشتہ پانچ سال سے نشریات جاری رکھے ہوئے ہے۔https://www.facebook.com/adbistan


ADBISTAN TV


جمعرات، 22 ستمبر، 2016

ہونا پڑا جو منتقل ، مجنوں کو شہر میں / یہ دشت یہ سراب مجھے دینا پڑ گیا / محمد سلیم طاہر

محمد سلیم طاہر
اک شخص کو جواب ، مجھے دینا پڑ گیا
تحفے میں اک گلاب ، مجھے دینا پر گیا
کرنا پڑی ادایٰیگی ، وعدوں کی ذیل میں
پچھلا بھی کچھ حساب مجھے دینا پڑ گیا
رکھ رکھ کے تنگ آ گیا تھا اپنے پاس میں
دل ، خانماں خراب مجھے دینا پڑ گیا
اپنے دل ِتباہ سے وہ بھی نہیں تھا خوش
اس کو بھی یہ عزاب مجھے دینا پڑ گیا
ہونا پڑا جو منتقل ، مجنوں کو شہر میں
یہ دشت یہ سراب مجھے دینا پڑ گیا
مدہوش دیکھتا رہا ساقی کی سمت میں
ہر جام کا حساب ، مجھے دینا پڑ گیا
یک لخت آ گیا وہ ، نگاہوں کے سامنے
آنکھوں کو اک حجاب مجھے دینا پڑ گیا


کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں