ادبستان اور تخلیقات کے مدیرِاعلیٰ رضاالحق صدیقی کا سفرنامہ، دیکھا تیرا امریکہ،،بک کارنر،شو روم،بالمقابل اقبال لائبریری،بک سٹریٹ جہلم پاکستان سے شائع ہو گیا ہے،جسے bookcornershow room@gmail.comپر میل کر کے حاصل کیا جا سکتا ہے
اردو کے پہلے لائیو ویب ٹی وی ،،ادبستان،،کے فیس بک پیج کو لائیک کر کے ادب کے فروغ میں ہماری مدد کریں۔ادبستان گذشتہ پانچ سال سے نشریات جاری رکھے ہوئے ہے۔https://www.facebook.com/adbistan


ADBISTAN TV


جمعہ، 30 ستمبر، 2016

اک مصّور ہے کہ صدیوں سے مسلسل / تیری تصویر بنانے پہ لگا ہے / سحرتاب رومانی

سحرتاب رومانی
چار سو خاک اڑانے پہ لگا ہے
دل نیا جشن منانے پہ لگا ہے
میرے اشکوں کا سمندر ہے کہ اب بھی 
دشت کی پیاس بجھانے پہ لگا ہے
بات اب بات بنانے سے بنے گی 
تیر تو ٹھیک نشانے پہ لگا ہے
مہربانی ہے چراغوں پہ ہوا کی 
حبس تو دیپ بجھانے پہ لگا ہے
وقت رکتا ہی چلا جاتا ہے لیکن 
انساں رفتار بڑھانے پہ لگا ہے
سامنے اندھے سپاہی بھی کھڑے ہیں 
چور بھی شور مچانے پہ لگا ہے
اک مصّور ہے کہ صدیوں سے مسلسل 
تیری تصویر بنانے پہ لگا ہے
وہ سحر ساری شرارت ہی مری تھی 
جس کا الزام زمانے پہ لگا ہے
-

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں