ادبستان اور تخلیقات کے مدیرِاعلیٰ رضاالحق صدیقی کا سفرنامہ، دیکھا تیرا امریکہ،،بک کارنر،شو روم،بالمقابل اقبال لائبریری،بک سٹریٹ جہلم پاکستان سے شائع ہو گیا ہے،جسے bookcornershow room@gmail.comپر میل کر کے حاصل کیا جا سکتا ہے
اردو کے پہلے لائیو ویب ٹی وی ،،ادبستان،،کے فیس بک پیج کو لائیک کر کے ادب کے فروغ میں ہماری مدد کریں۔ادبستان گذشتہ پانچ سال سے نشریات جاری رکھے ہوئے ہے۔https://www.facebook.com/adbistan


ADBISTAN TV


جمعہ، 21 نومبر، 2014

مصیبت میں ہوئی ہے عقل کی اوقات ظاہر ۔۔ اعجاز گل

اعجاز گل

کہانی       پن        ذرا       بھی       اب       کہانی     میں    نئیں    ہے
اٹک     کر     چل     رہی      ہے       اور       روانی     میں    نئیں    ہے
 مصیبت       میں      ہوئی     ہے      عقل      کی       اوقات        ظاہر  
سیانے     پن     سی      شے     کوئی     سیانی     میں    نئیں    ہے
 مری         لاحاصلی      نے         کی          ادا         رسمِ       خسارہ            کہ          چھوڑی            رائگانی              رائگانی     میں    نئیں    ہے
 ہوئی     ہے      جیب     خالی      اب      بہت      آرام       سے      ہوں
طلب      اشیائے        ارزاں          کی         گرانی     میں    نئیں    ہے


 کمی    ہے    شعر      میں     شاید      کہیں     حسنِ     بیاں       کی   
  بظاہر       کچھ        غلط          لفظ      و     معانی     میں    نئیں    ہے
 رہے      گا      بحث      میں      موجود      کج      بحثی     کی    خاطر
کہ      حل     جس    مسئلے     کا     نکتہ     دانی     میں    نئیں    ہے
 مزے    سب    چکھ    لئے   ہیں      آب   و    دانے    کے      مکیں     نے
کشش     باقی         کسی        نقلِ         مکانی     میں    نئیں    ہے 
 ہمیشہ         جاگزیں        ہے       ہر       نشاں     میں       بے   نشانی
نشاں        ملتا       نشاں      کا        بے    نشانی     میں    نئیں    ہے
 خس    و    خاشاک    سیرِ     باغ      سے     اب      تھک     گئے    ہیں
کہ       تیزی       لگ       رہی         بادِ        خزانی     میں    نئیں    ہے  

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں