ادبستان اور تخلیقات کے مدیرِاعلیٰ رضاالحق صدیقی کا سفرنامہ، دیکھا تیرا امریکہ،،بک کارنر،شو روم،بالمقابل اقبال لائبریری،بک سٹریٹ جہلم پاکستان سے شائع ہو گیا ہے،جسے bookcornershow room@gmail.comپر میل کر کے حاصل کیا جا سکتا ہے
اردو کے پہلے لائیو ویب ٹی وی ،،ادبستان،،کے فیس بک پیج کو لائیک کر کے ادب کے فروغ میں ہماری مدد کریں۔ادبستان گذشتہ پانچ سال سے نشریات جاری رکھے ہوئے ہے۔https://www.facebook.com/adbistan


ADBISTAN TV


جمعرات، 23 اکتوبر، 2014

چھن گیا جو تھا مری تحویل میں ۔۔ سحر تاب رومانی

سحر تاب رومانی
چھن گیا جو تھا مری تحویل میں 
کچھ نہیں باقی بچا زنبیل میں
تیرگی چھاتی رہی ماحول پر 
روشنی جلتی رہی قندیل میں
چاند اب اس میں نہاتا روز ہے 
عکس دیکھا تھا ترا جس جھیل میں
کس نے روکا ہے مری تعمیر کو 
کون حائل ہے مری تکمیل میں
بات اسکی آخری تھی، آخرش 
لکھ رہا تھا وہ مجھے تاویل میں
ایک دھوکا ہے یہ ساری کائنات 
اور الجھا جو گیا تفصیل میں
زندگانی حکم تھا اسکا سحر 
سو گزاری ہے فقط تعمیل میں

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں